24-11-2017

پشاور ہائی کورٹ نے ریپڈبس ٹرانزٹ منصوبے کے خلاف دائر رٹ درخواست پر فیصلہ محفوظ کر لیا ہے ۔

چیف جسٹس پشاور ہائی کورٹ جسٹس یحیی آفریدی اورجسٹس سید افسر شاہ پر مشتمل دو رکنی بنچ نے دائر رٹ کی سماعت کرتے ہوئے ایڈوکیٹ جنرل خیبر پختونخوا سے منصوبے پر کام کرنے والی کمپنی اور بولی کاغذات سمیت ایشین ڈیویلپمنٹ بینک  کی بولی متعلق سفارشات طلب کر لیں ۔سماعت کےد وران ایڈوکیٹ جنرل خیبر پختونخوا نے مطلوبہ دستاویزات ، سیکشن فور نوٹی فیکیشن ، کینٹ حکام کے این او سی ، ڈسٹرکٹ کونسل پشاور کے خط وکتابت اور کنٹریکٹ کی دستاویز سمیت ٹریفک پلان عدالت کو فراہم کرتے ہوئے موقف اپنایا کہ صوبے کی تاریخ میں پہلی مرتبہ منصوبے پر اتنی تیزی سے کام جاری ہے جس کےلئے بین الاقوامی معیار کی مشینری استعمال کی جا رہی ہے جبکہ آلودگی پر کنٹرول کے لئے کنٹریکٹرز کو پانی کے چھڑکاو کا کہا گیا ہے اور ٹریفک مسائل کے حل کےلئے پولیس نے ایک جامع پلان بنایا ہے ۔عدالت نے دلائل مکمل ہونے پر فیصلہ محفوظ کر لیا۔