02-05-2018

لاہور ہائیکورٹ نے قصور میں عدلیہ مخالف ریلی اور ججز کے خلاف نازیبا الفاظ استعمال کرنے کے خلاف درخواست پر سماعت کرتے ہوئے ایم این اے وسیم اختر سمیت دیگر ن لیگی عہدیداران 4 مئی کو طلب کر لئے ہیں۔

لاہور ہائیکورٹ کے جسٹس مظاہر علی اکبر نقوی کی سربراہی میں فل بنچ نے قصور ڈسٹرکٹ بار کے صدر مرزا نسیم کی درخواست پر سماعت کی۔ درخواست گزار نے موقف اختیار کیا کہ 13 اپریل کو قصور کشمیر چوک پر سابق وزیراعظم کی نااہلی پر ریلی نکالی گئی، ریلی کی قیادت ن لیگ کے ایم این اے وسیم اختر، ایم پی اے صفدر انصاری نے کی۔ ریلی میں شریک ن لیگی قائدین اور کارکنان نے عدلیہ کے خلاف تضحیک آمیز نعرے بازی کی لہٰذا ملزموں کیخلاف توہین عدالت کی کارروائی کی جائے۔

عدالت نے متعلقہ آر پی او کو ایم این اے  سمیت دیگر کی حاضری یقینی بنانے کا حکم دیتے ہوئے سماعت 4 مئی تک ملتوی کر دی۔