06-04-2018

سیشن جج /سپیشل ٹاسک جج پشاور اقبال خان نے قتل کے الزام میں گرفتار ملزم کو سزائے موت اور تین لاکھ روپے دیت مقتول کے ورثاء کو دینے کے احکامات جاری کردیئے  ہیں عدالت نے ملزم کو اسلحہ رکھنے کے جرم میں تین سال قید کی سزا  بھی سنائی ۔

استعاثہ کی جانب سے عدالت کو بتایا گیا  کہ ملزم محمد عارف سکنہ کھجورے باڑہ حال سربند پشاور پر الزام ہے کہ اُ س نے 2012ء میں سابقہ دشمنی کے بنا پر عبد اللہ نامی شخص کو تھانہ حیات آباد کی حدود میں واقع اتوار بازار میں فائرنگ کرکے میں قتل کیا تھا جس کے خلاف ایف آر درج کردی گئی تھی اور ملزم کو موقع پر گرفتار کیا گیا تھا ۔

استعاثہ کی جانب سے جرم ثابت ہونے پر فاضل عدالت نے  ملزم کو سزائے موت اور مقتول کے ورثاء کو تین لاکھ روپے دیت دینے کے احکامات جاری کئے ۔ عدالت نے حکمنامے میں کہا کہ دیت نہ دینے پر ملزم مزید تین سال قید رہے گا  جبکہ اسلحہ رکھنے کے ایک اور جر م میں ملزم کو جرم ثابت ہونے پر تین سال قید اور 30ہزار جرمانہ کی سزا  بھی سنائی گئی۔