07-04-2017

سپریم کورٹ نے  کوہستان ویڈیو اسکینڈل کیس میں چیئر مین نادراسے مبینہ طور پر قتل کی گئی  خواتین سرن جان اور بازعہ جان بی بی کے بارے میں مکمل تفصیلات طلب کرتے ہوئے مزید سماعت بیس اپریل تک ملتوی کردی ہے۔

جسٹس اعجاز افضل خان کی سربراہی میں سپریم کورٹ کے تین رکنی بینچ  نے کیس کی سماعت کی تو درخواست گزار کے وکیل نے عدالت میں موقف اپنایا کہ کمیشن کےآگے پیش کی جانے والی لڑکیاں اصلی نہیں تھیں ، عدالت چاہتے تو ان کو طلب کر کے ان کے بائیو ڈیٹا کی تصدیق کروالے ۔ لڑکیوں کے وکیل نے عدالت میں موقف اپنایا کہ تین رکنی کمشن کی رپورٹ کے بعد معاملہ کلیئر ہو چکا ہے اور وہ کمیشن کی رپورٹ  سے مطمئن ہیں اس پر جسٹس اعجاز افضل خان نے کہا کہ عدالت رپورٹ سے مطمئن نہیں ، شکوک و شبہات موجود ہیں اگر لڑکیوں کا زندہ ہونا ثابت ہو جائے تو معاملہ ختم ہو جائے گا ۔عدالت نے کہا کہ اگر انھیں عدالت میں پیش بھی کردیا جائے تو کوئی بھی انھیں درست طریقے سے شناخت نہیں کرپائے گا۔